پاکستان مسلم لیگ ن کے ایک اور ممبر کا اقامہ نکل آیا۔ ۔۔

زرائع کے مطابق خواجہ آصف کے بعد ایک اور ن لیگی قومی اسمبلی کا اقامہ چیلنج۔ سابق وفاقی وزیر اعجاز الحق نے اپنے مخالف امیدوار کے خلاف ہائی کورٹ سے رجو کیا۔ اعجاز الحق نے اپنی درخواست میں ہائی کورٹ سے کہا ہے کہ ان کے مخالف امیدوار ایم این اے نور الحق تنویر نے اقامہ رکھا ہوا ہے اور انہوں نے اپنے کاغزات نامزدگی میں یو اے ای میں موجود اکاؤنٹس ظاہر نہیں کیے جبکہ اقامہ کی مدت ختم نہ ہوئی تھی ۔ اقامہ کے بارے میں معلومات اور اپنے زرائے امدن چھپانے پر نور الحق تنویر 62 ،63 کے تحت صادق اور امیں نہیں رہے اس لیے ان کو نا اہل کیا جائے۔ ۔

نور الحسن تنویر این اے 169 بہاولنگر سے ن لیگ کے امیدوار منتخب ہوئے ہیں۔ الیکشن کمیشن، سیکٹری قومی اسمبلی، سپیکر قومی اسمبلی درخواست میں فریق ہیں

اپنا تبصرہ بھیجیں