اس سال ایف بی آر نے 3 فیصد زیادہ ٹیکس جمع کیا۔ ۔

ایف بی آر زرائع کے مطابق اس سال ایف بی آر نے تین فیصد زیادہ ٹیکس جمع کیا ہے۔ یہ تفصیلات ایف بی آر ممبر ڈاکٹر حامد عتیق اور سیما شکیل نے میڈیا سے گفتگو کے دوران فراہم کی۔ ۔ان کا کہنا تھا جولائی تا جنوری 2 ہزار ارب سے زیادہ ٹیکس جمع کیا گیا ہے البتہ 7 ماہ کے دوران ہدف سے 191 ارب کم اکھٹا ہوا ، دو ہولڈنگ ٹیکس کی مد میں 40 ارب روپے کم اکھٹا ہوا۔ ایف بی آر کے مطابق 12 لاکھ روپے آمدن پر ٹیکس چھوٹ سے بھی ریوینو پر منفی اثرات مراتب ہوئے ہیں، بنکنگ کے شعبے میں بھی ایک فہصد تک کمی آئی، ۔ آیف بی آر کا کہنا تھا کہ پہلے 7 ماہ میں 195 ارب روپے ریوینیو شارٹ رہا ہے، بے نامی سے مطالق قنون سخت کیا جا رہا ہے۔ کسی جائداد پر بے نامی ظاہر ہوئی تو وہ حکومت ضبط کرئے گی، آیف بی آر نے 6 ہزار آفراد کو نوٹس جاری کیے ہیں۔ 204 کیسز میں 6 ارب کے ٹیکس ڈیمانڈ جاری کیے گئے۔ ایف بی آر کے مطابق نوٹس کی بنیاد پر 6۔2 ارب روپے حاصل ہوئے ہیں ۔ ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں